M. Hameed Shahid
Home / 2015 (page 16)

Yearly Archives: 2015

As critiques of our moral bankruptcy and hypocrisy Shahid’s stories are almost pitiless in their indictment. The fractured style and the frenzied pace give them considerable impetus. Stories like “Sovarg mein sour” and “Marg zaar” make a mockery of our autocratic establishment. [M. Saleem ur Rehman]

As critiques of our moral bankruptcy and hypocrisy Shahid’s stories are almost pitiless in their indictment. The fractured style and the frenzied pace give them considerable impetus. Stories like “Sovarg mein sour” and “Marg zaar” make a mockery of our autocratic establishment. [M. Saleem ur Rehman] || || || || …

» مزید پڑھئیے

مٹی آدم کھاتی ہے|شمس الرحمن فاروقی

محمد حمید شاہد اپنے افسانوں میں ایک نہایت ذی ہوش اور حساس قصہ گو معلوم ہوتے ہیں۔ بظاہر پیچیدگی کے باوجود ان کے بیانیہ میں یہ وصف ہے کہ ہم قصہ گو سے دور نہیں ہوتے، حالانکہ جدید افسانے میں افسانہ نگار بالکل تنہا اپنی بات کہتا ہوا محسوس ہوتا …

» مزید پڑھئیے

ممتاز مفتی|رنگ رس والی کہانیاں

Mumtaz Mufti

ہم آج تک اپنی پر اسرار” میں“ کو نہیں سمجھ پائے تو دوسروں کو کیا سمجھیں گے۔ کہانی اس پر اسرار ”میں“ کی جھلکیاں پیش کرتی ہے ۔ اس لحاظ سے کہانی ایک عظیم تخلیق ہے ۔ ہر کہانی کار انسانی” میں “ کی ”پرزم“ کے رنگوں کی جھلکیاں دکھانے …

» مزید پڑھئیے

افتخار عارف|حمید شاہد:بہت معتبراورنہایت لائق توجہ افسانہ نگار

افتخار عارف، فتح محمد ملک، منشایاد، محمد حمید شاہد

حمید شاہد کی کہانیاں احساس اور جذبے کی قوت سے آگے بڑھتی ہیں ۔ اپنی زمین سے اور اپنی تہذیبی روایت سے تشکیل پانے والی آگہی اور شعور کے ثمرات جا بجا رنگ بکھیرتے نظر آتے ہیں ۔ کہانیوں کے بیانیے میں استعمال ہونے والی زبان کی بھی داد دی …

» مزید پڑھئیے

محمد منشایاد|رنگ رنگ کے رنگ

محمد حمید شاہد، منشایاد، زبیر رضوی

حمید شاہد کے فن ِافسانہ نگاری کی اہم خوبی ہے کہ وہ کسی ایک خاص ڈکشن کے اسیر نہیں ہوئے اور صاحبِ اسلوب بننے کی کوشش میں خود کو محدود نہیں کیا۔ وہ خیال ،مواد اورموضوع کے ساتھ تکنیک اور اسلوب میں ضرورت کے مطابق تبدیلی پیدا کرلیتے ہیں۔ وہ …

» مزید پڑھئیے

احمد ندیم قاسمی| معاشرتی اور تہذیبی زندگی کی تاریخ

احمد ندیم قاسمی

محمد حمید شاہد نے سچی اور کھری زندگی کی ترجمانی کا حق ادا کر دیا ہے ۔وہ کہانی کہنے کے فن پر حیرت انگیز طور پر حاوی ہے ۔ اس کے افسانوں کے ہر کردار کو زندگی کے اثبات یا نفی‘مسرت یامحرومی کی علامت قرار دیا جا سکتا ہے۔ان افسانوں …

» مزید پڑھئیے

ناصر عباس نیر|”مرگ زار“ کے مطالعے میں

ناصر عباس نیر،افتخار عارف، فتح محمد ملک، محمد حمید شاہد، منظر نقوی

محمد حمید شاہد کا افسانہ ”سورگ میں سو ر“ اپنی تیکنیک‘ فنی ہنر مندی اور موضوع وتھیم ‘ ہر حوالے سے اُردو ادب کا اہم افسانہ ہے ۔ ”سورگ میں سو ر“ میں بالائی سطح پر بارانی زمین پر آباد سورگ ایسے گاوں اور اس کے محنت کش باسیوں کے …

» مزید پڑھئیے

اپنا سکّہ|محمد حمید شاہد

“یا حضرت ! بیان جاری ہوـ”:=: ”بیان؟ ارے نادانو! میں کیا‘ میرا بیان کیا۔ میں پہلے خود بہکا تھا۔ پھر اَپنی آل کو بہک جانے دیا۔ اور اب لوٹ جانے کو مٹی میں کودے پھرتا ہوں۔ سمجھو تو یہ دنیا بڑی اشتہا انگیز ہے۔ پانیوں میں غوطہ زن نچلی ذَات کی …

» مزید پڑھئیے

آٹھوں گانٹھ کمیت|محمد حمید شاہد

یوں نہیں ہے کہ میری بیوی میرا دِھیان نہیں رَکھتی بل کہ واقعہ تو یہ ہے کہ اس کم بخت کا دِھیان میری ہی طرف رہتا ہے ۔ اَجی یہ کم بخت جو میری جیبھ سے پھسل پڑاہے تواس سے یہ تخمینے مت لگا بیٹھنا کہ خدانخواستہ ہم دونوں میں محبت …

» مزید پڑھئیے

اللہ خیر کرے|محمد حمید شاہد

  اُسے دفتر پہنچے یہی کوئی پندرہ بیس منٹ ہی گزرے ہوں گے کہ ٹیلیفون کی گھنٹی بج اُٹھی۔ محسن کو ایک عرصے کے بعدےاد آیا‘ دِل کی دھڑکن کبھی کبھی سینے سے باہر بھی اُبل پڑتی ہے…. دَھک ‘دَھک‘ دَھک…. ےوں‘ جیسے کوئی زور زور سے میز پر مکے …

» مزید پڑھئیے