M. Hameed Shahid
Home / کتابیں / بند آنکھوں سے پرے

بند آنکھوں سے پرے

 

band
بند آنکھوں سے پرے

BAND ANKHOON SE PARAY

BY : MOHAMMAD HAMEED SHAHID

Pages 240, 1994,Lahore

“بندآنکھوں سے پرے‘‘ محمد حمید شاہد کے افسانوں کامجموعہ ہے جو 1994 میں لاہور سے شائع ہوا اور اردو دنیا میں افسانہ نگار کی قبولیت کا جواز بن گیا- اس مجموعہ میں چودہ اردو افسانے شامل ہیں- “برف کا گھونسلا”، “بند آنکھوں سے پرے”، “کفن کہانی” ، “ماسٹر پیس”، اس کتاب کی معروف کہانیاں ہیں-

 

رنگ رس والی کہانیاں، تہذیبی زندگی کی تاریخ

محمد حمید شاہد کے بات کہنے کا انداز ایسا ہے کہ وہ پہنچ جاتی پے- اس کے بیان میں سادگی اور خلوص ہے- خیالات میں ندرت ہے- اس کا نقطہ نظر مثبت پے -اور اس کی سچائیوں میں رنگ ہے رس ہے

ممتاز مفتی

بندآنکھوں سے پرے ایک ایسے تخلیق کار کے افسانے ہیں جو زندگی کی شاہراہوں سے زیادہ اس کی پگڈنیوں سے گزرا ہےاور اس طرح اس کے مشاہدے میں زندگی کا بھرپور پن پوری بلاغت کے ساتھ در آیا ہے- محمد حمید شاہد نے سچی اور کھری زندگی کا حق ادا کردیا ہے – وہ کہانی کہنے کے فن پر حیرت انگیز طور پر حاوی ہے-ان افسانوں کا ایک ایک کردار ایک ایک لاکھ انسانوں کی نمائندگی کرتا ہے- اور یوں بندآنکھوں سے پرے افسانوں کا مجموعہ تو ہے ہی مگر محمد حمید شاہد نے اس کے ساتھ ہی اسے لمحہ رواں کی معاشرتی ، ثقافتی اور تہذیبی زندگی کی تاریخ کا درجہ بھی دے دیا ہے

احمد ندیم قاسمی

 اس کتاب کے افسانے

کھانی سچ کہتی ہے

برف کا گھونسلا

اللہ خیر کرے

جنریشن گیپ

کہانی اور کرچیاں

سجدہ سہو

ماسٹر پیس

بند آنکھوں سے پرے

اپنا سکہ

وراثت میں ملی ناکردہ نیکی

مراجعت کا عذاب

آئینے سے جھانکتی لکیریں

آخری صفحہ کی تحریر

کفن کہانی

 


Related Links|Please Click to Visit

ڈاکٹر توصیف تبسم|اثبات

پروفیسر فتح محمد ملک|بند آنکھوں سے پرے‘ جنم جہنم اور مرگ زار

امجد طفیل|محمد حمیدشاہد کے افسانے

محمد حمید شاہد کےپچاس افسانے

مرگ زار

جنم جہنم

آدمی

(مٹی آدم کھاتی ہے (ناول

پارو

About Urdufiction

یہ بھی دیکھیں

محمد کا مران شہزاد|فکشن اور تنقید کا تازہ اسلوب

کتاب : فکشن اور تنقید کا تازہ اسلوب مصنف : محمدکامران شہزاد صفحات: 352 قیمت …

33 تعليق

  1. Pingback: » موت منڈی میں اکیلی موت کا قصہ|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  2. Pingback: » واپسی|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  3. Pingback: » موت کا بوسہ|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  4. Pingback: » مرگ زارM. Hameed Shahid

  5. Pingback: » جنم جہنمM. Hameed Shahid

  6. Pingback: » سید محمد اشرف| مسلسل نیا پن … تکرار کی حد تک نیا پنM. Hameed Shahid

  7. Pingback: » تکلے کا گھائو|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  8. Pingback: » معزول نسل|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  9. Pingback: » مَرگ زار|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  10. Pingback: » آخری صفحہ کی تحریر|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  11. Pingback: » کتابُ الاموات سے میزانِ عدل کاباب|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  12. Pingback: » بَرشَور|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  13. Pingback: » نئی الیکٹرا|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  14. Pingback: » لوتھ|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  15. Pingback: » سجدہ سہو|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  16. Pingback: » جنم جہنم-1|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  17. Pingback: » پارہ دوز|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  18. Pingback: » نِرمَل نِیر|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  19. Pingback: » کفن کہانی|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  20. Pingback: » کہانی کیسے بنتی ہے|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  21. Pingback: » گرفت|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  22. Pingback: » کِکلی کلیر دِی|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  23. Pingback: » آدمیM. Hameed Shahid

  24. Pingback: » برف کا گھونسلا|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  25. Pingback: » پارو|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  26. Pingback: » منجھلی|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  27. Pingback: » ماخوذ تاثر کی کہانی|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  28. Pingback: » دوسرا آدمی|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  29. Pingback: » کیس ہسٹری سے باہر قتل|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  30. Pingback: » بھُرکس کہانیوں کا اندوختہ آدمی|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  31. Pingback: » شاخ اشتہا کی چٹک|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  32. Pingback: » ادارہ اور آدمی|محمد حمید شاہدM. Hameed Shahid

  33. Pingback: احمد ندیم قاسمی| معاشرتی اور تہذیبی زندگی کی تاریخ – M. Hameed Shahid

اترك تعليقاً

لن يتم نشر عنوان بريدك الإلكتروني. الحقول الإلزامية مشار إليها بـ *